Kids Stories Online

Breaking News
recent

گیدڑ کی مکاری KIDS STORIES.ONLINE

 گیدڑ کی مکاری

ایک دفعہ کا ذکر ہے کہ
کسی جنگل مین ایک ڈیل ڈول کا ہا تھی رہتا تھا۔ اس جنگل میں ایک طرف گیدڑوں کا ایک غول بھی رہا کرتا تھا۔ جب ہا تھی اپنی سونڈ کو ہلا تا، جھومتا جھومتا، چلتا پھرتا تو گیدڑ اسے دور ہی سے دیکھ کر

للچاتے اوردل میں اس کے گوشت کے مزے لیتے، مگر بس نہ چلتا تھا کہ اتنے بڑے قدآور ہاتھی کے گوشت سے کس طرح لطف اندوز ہوں۔
گیدڑ کی مکاری

ایک مدت کی للچاہٹ کے بعد تمام گیدڑ ایک رات جمع ہوئے اور ہاتھی کو مارنے کی فکر کرنے لگے۔ آ خر ایک بوڑھے گیدڑ نے ہا نک لگائی کہ تم مردہ ہا تھی کا گوشت کھانے کی سوچ رہے ہو۔میں تمھیں زندہ ہا تھی کا گوشت کھلا وں گا۔ سارے گیدڑ خوش ہوگئے اور اسی کو اپنا لیڈر بنا لیا.

رات کا وقت تھا، ہاتھی جنگل میں ٹہل رہا تھا۔ وہی گیدڑ اس کے قریب آ یا اور بڑ ے ادب سے سلام کر کے بولا:

" حضور! ہم سب گیدڑوں نے فیصلہ کیا ہے کہ آپ کو اپنا بادشاہ بنا لیں اور آپ کی حکومت میں امن چین کی زندگی بسر کریں۔"

ہا تھی نے گیدڑ کی بات سنی اور خوش ہو کر بولا: " ہاں ہاں مجھے منظور ہے۔ چلو سب گیدڑوں کی منظوری لے لیں۔" غرض ہاتھی گیدڑ کے ساتھ چل پڑا۔ گیدڑ اسے ایک ایسی جگہ لے گیا جہاں دلدل تھی۔ گیدڑ ہلکا پھلکا جانور چھلا نگیں لگا تا ہوا دلدل پر چلنے لگا۔ ہاتھی بادشا ہی کے نشے میں دلدل میں اتر اور دھنسنے لگا۔ آ خر گھٹنوں تک دلدل میں پھنس گیا۔ اب نہ آگے چلنے کا یرا تھا، نہ پیچھے ہٹنے کی طاقت۔

گیدڑ کی مکاری

ہاتھی گیدڑ سے چنگھاڑ کر بولا : " اب کیا کروں؟ " گیدڑ نے کہا! آپ بھاری بھر کم ہیں، میں اکیلا تو آپ کو نہیں نکال سکتا۔ حکم ہو تو اپنی قوم کو بلا لوں۔"
ہا تھی مرتا کیا نہ کرتا ، کہنے لگا:" ہا ں ! جلدی بلاو۔" گیدڑ نے آواز لگائی اور سیکڑوں گیدڑ آن جمع ہوئے اور لگے ہا تھی کا گوشت  کا ٹنے اور مزے لے لے کر ہاتھی کا گوشت کھانے لگئے۔

 ہاتھی نے بہتیری سونڈ ہلائی، چنگھاڑا مگر گیدڑوں نے وہیں کھڑے کھڑے ہاتھی کا گوشت چٹ کر لیا۔

No comments:

Theme images by Silberkorn. Powered by Blogger.